جسٹس شوکت عزیز صدیقی نےبڑی پابندی عائد کرتے ہوئے 4اینکرزکو سخت ترین وارننگ جاری کر دی

سٹس شوکت عزیز صدیقی بلا شبہ ایک محب وطن اور اسلام پسند شخص ہیں ان ککے چرچے پہلے بھی پاکستانی معاشرے میں اسلام کی وجہ سے بہت ہیں کیونکہ ان کے فیصلے مسلمانوں کے دلی ف خواہشات کے عین مطابق ہوتے ہیں اور اب جو قدم جسٹس

صاحب نے اٹھایا ہے یہ بہت پہلے سے عوام چیخ رہی تھی اسلام آباد ہائیکورٹ میں رمضان ٹرانسمیشن اور مارننگ شوز سے متعلق کیس کی سماعت کے دوران جسٹس شوکت

عزیز صدیقی نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ عامر لیاقت ،ساحر لودھی ،فہد مصطفی اور وسیم بادامی باز آجائیں ،سحرو افطار میں اچھل کود اور دھمال نہیں چلنے دیں گے .

جسٹس شوکت صدیقی نے کہا کہ اچھل کو داور دھمال عامر لیاقت نےمتعارف کرائی ،باقی سب ان کے شاگر دہیں ،انہوں نے کہا کہ اسلامی موضوعات پر کرکٹرز اور اداکاروں کو بات کرنے کیلئے بیٹھا دیا جاتاہے

، اسلام پر پی ایچ ڈی سکالرسے کم بات نہیں کرے گا،جسٹس شوکت صدیقی نے حکم دیا کہ تمام چینلز مغرب کی اذان سے پانچ منٹ قبل درودشریف یا قصیدہ بردہ شریف نشر کریں

، کوئی اشتہار نہیں چلے گا. انہوں نے کہا کہ میں وہ حکم نہیں دیتا جس پر عملدرآمد نہ کراسکوں، آپ کو ہماری پوسٹ پسند آئی تو اپنے دوستوں کیساتھ شئیر کیجئیے

Reply